نظم

میری نظمیں

حشر کی تاریکیوں میں شہر ہے ڈوبا ہوا

اے لبِ گویا سنبھل حشر کی تاریکیوں میں شہر ہے ڈوبا ہوا تو کرن تارے کی ہے تجھ سے الجھنے…

Read More »
Back to top button
Close
Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker